”صرف دو چیزیں ملائیں کوئلے جیسے ہاتھ پاؤں ملائی جیسے بنائیں“

”صرف دو چیزیں ملائیں کوئلے جیسے ہاتھ پاؤں ملائی جیسے بنائیں“

ایک سوال ہے میری عمر تیس سال ہے ۔میرے ہاتھ پاؤں بہت کالے ہیں۔ کوئی نسخہ بتادیں؟ ا س کا جواب کچھ یوں ہے۔ اگر رنگ کو گورا کرنا چاہتے ہو نا ۔ تو سب سے آسان حل ہے تہجد پڑھو۔ تہجد پڑھو۔ یقین جانو ! تہجد میں لمبے سجدے کرو۔ جس بندے کا بھی یہ مسئلہ ہے۔ صرف ایک مہینہ تہجد پڑھے۔ آج اپنا رنگ نوٹ کرلے۔ اور ایک مہینے کے بعد انشاءاللہ! وہ خود کہے گا کہ واقع مجھے فرق نظر آرہا ہے۔ اور اس کے ساتھ جو گلاب کا عرق ہے۔ گلا ب کا عرق اور لیمن لےلو۔ لیمن کو اپنے پانی میں معمول بنا لیں۔ وہ بکثرت جو پانی پینا ہے۔ اس میں لیمن ملا کر پیے۔ اور لیمن اور گلاب کے عرق سے اپنے ہاتھوں پر جیسے روئی لیں اور اس سے اپنے ہاتھ صاف کریں۔صبح اور شام بھی یہ عمل دہرائیں۔ ایک سوال ہے کہ ڈپریشن نہیں جاتا۔ ہر وقت چھوٹی چھوٹی بات پر دکھ ہونے لگتا ہے؟
اس کا جواب کچھ یوں ہے۔ یہ ڈپریشن جو ہے۔ اس کو آسان سا بتادیتے ہیں۔ ڈپریشن کہتے ہیں کہ جب آپ کا دماغ کسی کی بات کو ، کسی کے رویے کو ، کسی کے دکھ کو، درد کو، غم کو، رنج کو پکڑ لیتا ہے۔ جب ہمارا دماغ ان چیزوں کو پکڑ لیتا ہے۔ تو اس کے بارے میں سوچتا رہتا ہے۔ اور ہم کچھ کر نہیں سکتے۔ تو دکھی ہوتے رہتے ہیں۔ اس کو ڈپریشن کہتے ہیں۔ سب سے پہلے مع اف کرنا سیکھو۔ جتنا معا ف کرو گے۔ اتنا زیادہ خوش رہو گے۔ ہاتھوں اور پیروں پر جو فالتو بال ہوتے ہیں ان سے ہاتھوں اور پیروں کی خوبصورتی ختم ہو جاتی ہے۔ ویکسنگ کرنے سے ہاتھوں اور پیروں کے فالتو بال صاف ہو جاتے ہیں اور ہاتھ پاﺅں خوبصورت دکھائی دیتے ہیں۔ تیار ویکس کریم بازار میں بآسانی مل جاتی ہے۔ ویکس کرنے کا طریقہ یہ ہے کہ کسی موٹے کپڑے پر اچھی طرح ویکس کریم لگا لیں۔
پھر جہاں کے بال صاف کرنا مقصود ہوں وہاں پر کپڑا لگائیں۔ کپڑا بالوں کی مخالف سمت نہ لگائیں۔ کپڑے کو اچھی طرح چپکا کر بالوں کی مخالف سمت میں ایک جھٹکے سے کھینچ لیں۔ اسی طریقے سے دونوں ہاتھوں اور پیروں کی ویکسنگ کریں۔ ویکسنگ کرنے کے بعد نمایاں فرق آپ محسوس کریں گی۔ ہاتھوں اور پیروں کی حفاظت کیلئے یہ تو کچھ موجودہ اور جدید طریقے تھے جو بآسانی کسی بھی پارلر میں کیے جا سکتے ہیں لیکن کچھ قدیم نسخے ایسے بھی ہیں جن کا ہاتھوں‘ پیروں پر استعمال کسی پارلر میں نہیں ملتا۔ یہ کچھ ایسے گھریلو طریقے ہیں
جو عرصہ دراز سے عورتیں اپنے ہاتھوں اور پیروں کی حفاظت کیلئے استعمال کرتی آرہی ہیں جن میں سے کچھ آزمودہ طریقے آپ کیلئے پیش کیے جارہے ہیں۔ ایک بالکل آسان اور سادہ طریقہ تو یہ ہے کہ لیموں جو ہر گھر میں استعمال ہوتا ہے، اس کے چھلکوں کو روزانہ بازﺅں اور کہنیوں پرملیں‘ یہ عمل آپ فون کرتے ہوئے یا اخبارات پڑھتے بھی کر سکتی ہیں اور اس کا اثر چند دنوں میں ہی نمایاں طور پر محسوس ہوتا ہے۔ دوسرا اگر آپ ابٹن میں تھوڑا سا دودھ یا پانی ملا کر پیسٹ بنا لیں۔ اسے اپنے بازوﺅں اور کہنیوں پر اچھی طرح ملیں۔ خشک ہو جائے تو رگڑ رگڑ کر اتار لیں۔ اس طریقہ سے نہ صرف بازﺅں کا کالا پن ختم ہو گا بلکہ ان کا فالتو رواں بھی ختم ہو جائے گا۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *