cہارمونز کی خرابی دور ہوگی کیونکہ یہ ۔۔ جانیئے خواتین میں کون سے بیج کھانے سے ہارمونز کے مسائل میں کمی آسکتی ہے؟

السی کے بیج، سورج مکھی کے بیج، تیل کے بیج، کدو کے بیج اور سونف ہر گھر کے کچن میں لازمی موجود ہوتے ہیں چاہے ان کا استعمال کھانوں میں بہت زیادہ خواتین کریں یا نہ کریں مگر آج ہماری ویب کے وومن ہیلتھ کارنر میں ڈاکٹر سحر زیبا کی بتائی ہوئی کچھ ایسی زبردست معلومات مووجد ہے جس کو جان کر خواتین ان 5 بیجوں کو روزانہ استعمال کرنا شروع کر دیں گی۔ سب سے زیادہ فائدے کی بات یہ ہے کہ ان پانچوں بیجوں کا استعمال بالغ لڑکیوں، شادی شدہ خواتین اور حاملہ خواتین ہر عمر کی خواتین کے لئے بہت فائدے مند ہیں کیونکہ ان میں ایسے فائدے چھپے ہیں جن کو سیڈ سائیکلنگ فار وومن کہا جاتا ہے جس کے متعلق کم ہی لوگ جانتے ہیں۔

حاملہ خواتین کے لئے کدو کے بیج ابتدائی ماہ میں کھانا بہت ضروری ہیں کیونکہ اس سے ان کے فیٹس میں موجود بچہ نشوونما پاتا ہے اور مضبوط جان بناتا ہے۔ ماہواری کے ہر قسم کے مسئلے کو دور بھگانے کے لئے ڈاکٹر کہتی ہیں کہ آپ روزانہ ایک چمچ السی کے بیجوں کو نیم گرم پانی سے پھانک لیں، یہ آپ کی اندرونی صحت اور خون کی ترتیب کو مستقل کر دیتا ہے۔ سونف اور الائچی کو اچھی طرح توے پر بھون کر روزانہ آدھا چمچ کھانے سے حاملہ خواتین کے تھرڈ ٹرائیمسٹر میں بہت مفید رہتا ہے اس سے دورانِ حمل قے یا متلی کو روکا جاسکتا ہے۔ کچھ ایسی لڑکیاں بھی ہیں جن کو ماہواری کے دوران جی متلی ہوتا ہے ان کے لئے یہ بہت مفید ہیں۔ لڑکیوں کی کم عمری میں ان کو ماہواری سائیکل رُک جاتی ہے جس سے سارا خون یوٹرس میں جمع ہونے اور رسنے لگتا ہے، اس کے لئے سب سے اچھا اور آسان نسخہ یہی ہے کہ آپ سورج مکھی کے بیجوں کو کچا چبا کر کھائیں اور ناریل کے تیل میں اچھی طرح فرائی کرلیں۔ ان کو روزانہ ایک ایک چمچ کھائیں اس سے ماہواری کا رکا ہوا خون بھی باسانی خارج ہوگا اور سائیکل نارمل بھی ہو جائے گی۔ خواتین کے گٹھنوں کے تمام مسائل کا حل روزانہ کالے تلوں کو بھون کر نیم گرم دودھ کے ساتھ پھانکنا ہے۔ اس سے آپ کے گٹھنے کا درد بھی کم ہوگا اور ہڈیوں میں جان بھی آئے گی۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *